mujhe tum yaad atay ho - مجھے تم یاد آتے ہو

mujhe tum yaad atay ho - Sad      Poetry - Sad Shayari

                   مجھے تم یاد آتے ہو 

مجھے تم یاد آتے ہو !

بہت زیادہ نہیں لیکن ،

خوشی میں اور غم میں

بارشوں میں بھیگتے اور سردیوں کی دھوپ میں بیٹھے

پرانی ڈائری كے حاشیوں میں

تمہارے کھلکھلاہٹ سے بھرے جملوں پڑھ کر مسکراتے

اور تمہارے کارڈز کو ہر بار اک نئے ترتیب سے رکھتے

جنم دن پر ،

ہر اک تہوار پر

سچ میں . . . مجھے تم یاد آتے ہو

بہت زیادہ نہیں لیکن

میری ہر سوچ میں ، دھڑکن میں ، سانسوں كے تسلسل میں

مجھے بھولے ہوئے ساتھی . . .

مجھے تم یاد آتے ہو . . . . .

mujhe tum yaad atay ho !
bohat ziyada nahi lekin ,
khushi mein aur gham mein
baarisho mein bhigtay aur sardiyoon ki dhoop mein baithy
purani diary ke hashiyon mein
tumharay khilkhilahat se bharay jumlon parh kar muskuratay
aur tumharay cards ko har baar ik ny tarteeb se rakhtay
janam din par ,
har ik tehwar par
sach mein. .. mujhe tum yaad atay ho
bohat ziyada nahi lekin
meri har soch mein, dharkan mein, saanson ke tasalsul mein
mujhe bhoolay hue saathi. . .
mujhe tum yaad atay ho. .. . .

Post a Comment

0 Comments