عجیب و غریب واقعات - حیرت انگیز واقعات - دلچسپ معلومات - Duniya Ke Ajeeb O Ghareeb Waqiat - Hadsaat - Itefaqat- Herat Angez Info

ajeeb-o-ghareeb-waqiat-herankun-waqiat-herat-angez-waqiat

Duniya ke aisay itfaqat jin par aap yaqeen nahi karen ge

دنیا کے ایسے اتفاقات جن پر آپ یقین نہیں کریں گے
 

کیا آپ اس بات سے واقف ہیں کہ“ نپولین اور ہٹلر کی پیدائش میں 129 سال کا وقفہ تھا اور ان کے اقتدار میں آنے میں بھی 129 سال کا درمیانی عرصہ تھا جبکہ دونوں کے روس کے خلاف محاذ کھولنے کا وقفہ بھی 129 سال کا ہی رہا اور یہی نہیں بلکہ دونوں کی شکست میں بھی 129 سال کا ہی وقفہ تھا“- یہی نہیں دنیا کی تاریخ ایسے متعدد ناقابلِ یقین اتفاقات کے واقعات سے بھری پڑی ہے- انہیں واقعات میں سے چند کا ذکر ہم آج کے آرٹیکل میں کریں گے-
 

موت کا مقام اور وقت ایک ہی:
2002 میں فن لینڈ میں ایک ٹرک نے موٹر سائیکل سوار کو اس وقت ٹکر مار کر ہلاک کر دیا جب وہ ہائی وے 8 کراس کر رہا تھا- ٹھیک 2 گھنٹے بعد اسی ہائی وے پر اس موٹر سائیکل سوار کا جڑواں بھائی بھی اسی ہالی وے کو پار کرتے ہوئے ٹرک کی ٹکر سے ہلاک ہوگیا-

تین افراد دو نام:
1920 میں تین انگریزوں کی ملاقات پیرو کی ایک ٹرین میں ہوئی- ان میں سے پہلے کا نام Bingham دوسرے کا Powell جبکہ تیسرے کا نام Bingham-Powell تھا-

دل کی تکلیف:
دو جڑواں بھائی جان اور آرتھر انگلینڈ میں ایک دوسرے سے 120 کلومیٹر کے فاصلے پر رہائش پزیر تھے- 22 مئی 1975 کو دونوں بھائیوں کو ایک ساتھ سینے کی تکلیف کا سامنا کرنا پڑا- دونوں بھائیوں کو علیحدہ اسپتال میں داخل کروایا گیا جبکہ دونوں ایک دوسرے کی حالت سے بےخبر تھے- اتفاقیہ طور پر دونوں کا ایک ساتھ ہی انتقال ہوگیا-

امریکی مصنفہ:
امریکی مصنفہ Anne Parrish جب پیرس کے ایک بک اسٹور کے نزدیک سے گزر رہی تھی اور قریبی شیلف میں جیک فروسٹ اور دیگر کہانیوں کی کتابیں دکھائی دے رہی تھیں تو اس نے اپنے شوہر کو بتانا شروع کردیا کہ وہ بچپن میں کتابوں سے کتنی محبت کرتی تھی- اسی دوران اس کے شوہر نے آگے بڑھ کر شیلف سے ایک کتاب اٹھا کر پہلا صفحہ کھولا تو اس کے اندر “Anne Parish, 209 N Weber Street, Colorado” درج تھا-

بہت کچھ ایسا جیسا:
اٹلی کا بادشاہ Umberto I جب ایک چھوٹے سے ریستوران گیا تو اسے معلوم پڑا کہ اس وہ اور ریستوران کا مالک ایک ہی دن اور ایک ہی قصبے میں پیدا ہوئے ہیں- یہی نہیں دونوں کی بیویوں کا نام بھی Margherita ہے- بات یہی ختم نہیں ہوتی بلکہ 29 جولائی 1900 کو بادشاہ کو خبر دی گئی کہ ریسٹورنٹ کے مالک کو اسٹریٹ پر قتل کردیا گیا اور ٹھیک دوسرے دن بادشاہ کو بھی ایک حملے میں قتل کردیا گیا-

آخری شہنشاہ:
روم کے بانی کا نام Romulus تھا جبکہ اس کے پہلے شہنشاہ کا نام Augustus تھا- حیران کن طور پر روم کے آخری شہنشاہ کا نام Romulus Augustus تھا-

پہلا اور آخری فوجی:
پہلے برطانوی فوجی کی قبر اور جنگ عظیم دوئم میں ہلاک ہونے والے آخری برطانوی فوجی کی قبر ایک ہی قبرستان میں صرف چند میٹر کے فاصلے پر ہے- اور یہ سب جان بوجھ کر نہیں کیا گیا بلکہ محض ایک اتفاق ہے-

ایک ہی شہر:
اسٹالن٬ ہٹلر اور فرانز جوزف کو اجتماعی طور پر تقریباً 80 ملین افراد کے قتل کا ذمہ دار قرار دیا جاتا ہے- دلچسپ بات یہ ہے کہ ان تینوں شخصیات کا تعلق ویانا سے تھا اور یہی ایک ہی وقت میں وہاں رہائش پذیر بھی تھے-

ماہرِ فلکیات کی موت:
جنوبی افریقہ کا 49 سالہ ماہرِ فلکیات Danie du Toit اپنی کلاس میں موت کے بارے میں لیکچر دے رہا تھا کہ کس طرح موت کسی بھی وقت آسکتی ہے؟ لیکچر کے اختتام پر جیسے اس نے mint اپنے منہ میں ڈالی اس کی سانس رک گئی اور چند منٹ بعد اس لیکچرار کی موت واقع ہوگئی-

نپولین اور ہٹلر:
نپولین اور ہٹلر کی پیدائش میں 129 سال کا وقفہ تھا اور ان کے اقتدار میں آنے میں بھی 129 سال کا درمیانی عرصہ تھا جبکہ دونوں کے روس کے خلاف محاذ کھولنے کا وقفہ بھی 129 سال کا ہی رہا اور یہی نہیں بلکہ دونوں کی شکست میں بھی 129 سال کا ہی وقفہ تھا-

کار:
1895 میں ریاست اوہائیو میں صرف دو کاریں موجود تھیں اور دلچسپ بات یہ ہے کہ آپس میں ہی ٹکڑا کر تباہ ہوگئیں-

ٹیکسی:
1975 میں ایک شخص اس وقت ایک ٹیکسی سے ٹکرا کر ہلاک ہوگیا جب وہ اپنی اسکوٹر پر کہیں جارہا تھا- ایک سال بعد اس شخص کا بھائی اسی اسکوٹر پر جاتے ہوئے اسی ٹیکسی کی ٹکر سے ہلاک ہوا جس کی ٹکر سے اس کا بھائی گزشتہ سال ہلاک ہوا تھا- اس سے زیادہ ناقابلِ یقین یہ ہے کہ دونوں مرتبہ ٹیکسی میں مسافر کے طور پر ایک ہی شخص سوار تھا

Kya aap is baat se waaqif hain ke“ napoleon aur hittler ki paidaiesh mein 129 saal ka waqfa tha aur un ke Iqtidaar mein anay mein bhi 129 saal ka darmiyani arsa tha jabkay dono ke Russia ke khilaaf mahaaz kholnay ka waqfa bhi 129 saal ka hi raha aur yahi nahi balkay dono ki shikast mein bhi 129 saal ka hi waqfa tha“- yahi nahi duniya ki tareekh aisay mutadid naqablِe yaqeen atfaqat ke waqeat se bhari pari hai thisishypenhere inhen waqeat mein se chand ka zikar hum aaj ke article mein karen ge

mout ka maqam aur waqt aik hi

2002 mein Finland mein aik truck neh motorcycle sawaar ko is waqt takkar maar kar halaak kar diya jab woh high way 8 cross kar raha tha- theek 2 ghantay baad isi high way par is motorcycle sawaar ka jurwan bhai bhi isi hali way ko paar karte hue truck ki takkar se halaak hogya-

3 afraad do naam

1920 mein teen engrazeo ki mulaqaat pairo ki aik train mein hoyi- un mein se pehlay ka naam bingham dosray ka powell jabkay teesray ka naam bingham-powell tha-

dil ki takleef

do jurwan bhai -  jaan aur arthur England mein aik dosray se 120 kilometer ke faaslay par rahaish pazeer they  22 May 1975 ko dono bhaieyon ko aik sath seenay ki takleef ka saamna karna prah- dono bhaieyon ko alehda hospital mein daakhil karwaya gaya jabkay dono aik dosray ki haalat se be khabar they thisishypenhere ittifaqia tor par dono ka aik sath hi intqaal hogya-

American Musanifa

American Musanifa anne parrish jab Paris ke aik buk store ke nazdeek se guzar rahi thi aur qareebi shelf mein jack frost aur deegar kahaaniyon ki kitaaben dikhayi day rahi theen to is neh –apne shohar ko batana shuru kardiya ke woh bachpan mein kitabon se kitni mohabbat karti thi- isi douran is ke shohar neh agay barh kar shelf se aik kitaab utha kar pehla safha khoola to is ke andar “anne parish, 209 n weber street, colorado” darj tha-

bohat kuch aisa jaissa

italy ka badshah umberto i jab aik chhootey se resturant gaya to usay maloom para ke is woh aur resturant ka maalik aik hi din aur aik hi qasbay mein peda hue hin- yahi nahi dono ki biwion ka naam bhi margherita hai
baat yahi khatam nahi hoti balkay 29 July 1900 ko badshah ko khabar di gayi ke restaurants ke maalik ko street par qatal kardiya gaya aur theek dosray din badshah ko bhi aik hamlay mein qatal kardiya gya-

aakhri shenshah

room ke baani ka naam romulus tha jabkay is ke pehlay shenshah ka naam augustus tha- heran kun tor par room ke aakhri shenshah ka naam romulus augustus tha-

pehla aur aakhri fouji

pehlay Bartanwi fouji ki qabar aur jung azeem doyam mein halaak honay walay aakhri Bartanwi fouji ki qabar aik hi qabrustan mein sirf chand meter ke faaslay par hai aur yeh sab jaan boojh kar nahi kya gaya balkay mehez aik ittafaq hai



aik hi shehar stalen hitler aur franz joseph ko ijtimai tor par taqreeban 80 million afraad ke qatal ka zimma daar qarar diya jata hai dilchasp baat yeh hai ke un teno shaksiaat ka talluq vyana se tha aur yahi aik hi waqt mein wahan rahaish Pazeer bhi they

maahir falkiat ki mout

janoobi Africa ka 49 sala maahir falkiat danie du toit apni classe mein mout ke barey mein lecture day raha tha ke kis terhan mout kisi bhi waqt askati hai? lecture ke ekhtataam par jaisay is neh mint –apne mun mein daali is ki saans ruk gayi aur chand minute baad is lecturar ki mout waqay hogyi-

napoleon aur hitler 

napoleon aur hitler ki paidaiesh mein 129 saal ka waqfa tha aur un ke Iqtidaar mein anay mein bhi 129 saal ka darmiyani arsa tha jabkay dono ke russia ke khilaaf mahaaz kholnay ka waqfa bhi 129 saal ka hi raha aur yahi nahi balkay dono ki shikast mein bhi 129 saal ka hi waqfa tha-

car 

1895 mein riyasat avhayyo mein sirf do karen mojood theen aur dilchasp baat yeh hai ke aapas mein hi tukda kar tabah hogayein

taxi 

1975 mein 1 shakhs is waqt aik taxi se takra kar halaak hogaya jab woh apni scooter par kahin ja raha tha- aik saal baad is shakhs ka bhai isi scooter par jatay hue isi taxi ki takkar se halaak sun-hwa jis ki takkar se is ka bhai guzashta saal halaak sun-hwa tha- is se ziyada naqablِ yaqeen yeh hai ke dono martaba taxi mein musafir ke tor par aik hi shakhs sawaar tha-

mazeed maloomat parhne ke liye yahan click karein