2 Bhaiyon Ki Larai - Sabaq Amoz Kahani Urdu Mein - Akalmand Tarkhan - Emotional Story Urdu Mein - Hindi Mein
وہ دونوں بھائی چالیس سال سے آپس میں  اتفاق سے رہ رہے تھے ۔ ایک بہت بڑا زرعی فارم تھا جس میں ساتھ ساتھ گھر تھے۔ 
دونوں خاندان ایک دوسرے کا خیال رکھتے، اولادوں میں بھی  بہت پیار اور محبت  تھی۔
ایک دن دونوں بھائیوں میں کسی بات پر اختلاف ہو گیا اور ایسا بڑھا کہ نوبت  گالی گلوچ تک جا پہنچی۔
چھوٹے بھائی نے غصے  میں دونوں گھروں کے درمیان ایک گہری اور لمبی کھائی کھدوا کر اس میں قریبی نہر  کا پانی چھوڑ دیا تا کہ ایک دوسرے کی طرف آنے جانے کا راستہ ہی نہ رہے۔
اگلے  روزبڑے بھائی نے ایک ترکھان کو اپنے گھر بلایا اور کہا کہ وہ سامنے والا فارم ہاؤس میرے بھائی کا ہے جس سے آج کل میرا جھگڑا چل رہا ہے۔ اس نے میر ے اور اپنے گھروں کے درمیان جانے والے راستے پر ایک گہری کھائی بنا کر اس میں پانی چھوڑ دیا ہے۔میں چاہتا ہوں کہ میرے اور اس کے فارم ہاؤس کے درمیان تم آٹھ فٹ اونچی باڑ لگا تاکہ نہ میں اس  کی شکل دیکھوں اور نہ ہی اس کا گھر میری نظروں کے سامنے آئے۔اور یہ کام جلد از جلد مکمل کر کے دو جس کی میں تمہیں منہ مانگی اجرت دوں گا ۔
ترکھان نے سر ہلاتے ہوئے کہا کہ مجھے پہلے آپ وہ جگہ دکھائیں جہاں سے میں نے باڑھ کو شروع کرنا ہے تاکہ ہم پیمائش کے مطابق ساتھ والے قصبہ سےضرورت کے مطابق مطلوبہ سامان لا سکیں .
موقع دیکھنے کے بعد ترکھان بڑےبھائی  کو ساتھ لے کر قریبی قصبے میں گیا اور چار پانچ کاریگروں کے علا وہ ایک بڑی پک اپ پر ضرورت کا تمام سامان لے کر آ گیا۔
ترکھان نے اسے کہا کہ اب آپ آرام کریں اور یہ کام ہم پر چھوڑ دیں۔ ترکھان اپنے مزدوروں کاریگروں سمیت سارا دن اور ساری رات کام کرتا رہا ۔
صبح جب بڑے بھائی کی آنکھ کھلی تو یہ دیکھ کر اس کا منہ لٹک گیا کہ وہاں آٹھ فٹ تو کجا ایک انچ اونچی باڑھ نام کی بھی کوئی چیز نہیں تھی ۔
غور کرنے پر معلوم ہوا کہ وہاں تو ایک بہترین پل بنا ہوا تھا ۔
ترکھان کی اس حرکت پر حیران ہوتا ہوا وہ جونہی اس پل کے قریب  پہنچا تو دیکھا کہ پل کی دوسری طرف کھڑا ہوا اس کا چھوٹا بھائی اسکی طرف دیکھ رہا تھا*
چند لمحے وہ خاموشی سے کھڑے کبھی کھائی اور کبھی اس پر بنے ہوئے پل کو دیکھتےرہے۔ چھوٹے کی آنکھوں میں آنسو آگئے کہ میں نے با پ   جیسے بڑے بھائی کا دل دکھایا مگر اس کے باوجود  وہ مجھ سے تعلق نہیں توڑنا چاہتا۔
بڑے نے جب اپنے  چھوٹےبھائی کی آنکھوں میں آنسو دیکھے تو اس کا بھی دل بھر آیا اور سوچنے لگا کہ غلطی جس کی بھی تھی مجھے یوں جذباتی ہو کر معاملہ بگاڑنا نہیں چاہیے تھا۔
دونوں اپنے اپنے دل میں شرمندہ ، آنکھوں میں آنسو لئے  ایک دوسرے سے بغل گیر ہو گئے۔ ان کی دیکھا دیکھی دونوں بھائیوں کے بیوی بچے بھی اپنے گھروں سے نکل کر بھاگتے اور شور مچاتے ہوئے پل پر اکٹھے ہو گئے۔
بڑے بھائی  نے ترکھان کو ڈھونڈنے کے لئے ادھر ادھر نظر دوڑائی تو دیکھا کہ وہ اپنے اوزار پکڑے جانے کی تیاری کر رہا تھا۔  بڑا بھائی جلدی سے اس کے پاس پہنچا اورکہا کہ  اپنی اجرت تو لیتے جاؤ۔
  ترکھان نے کہا اس پل کو بنانے کی اجرت آپ سے نہیں لوں گا بلکہ اس سے لوں گا جس کا وعدہ ہے
جو شخص اللّٰہ کی رضا حاصل کرنے کیلئے کہ لئے لوگوں میں صلح کروائے گا، اللّٰہ جلد ہی اسے عظیم اجر سے نوازے گا۔
یہ کہہ کر ترکھان نے اللّٰہ حافظ کہا اور چل پڑا
نوٹ   کوشش کریں کہ اس ترکھان کی طرح لوگوں کے درمیان پل بنائیں نہ کہ لوگون کو ایک دوسرے سے جدا کرنے کا سبب بنیں۔۔۔
برائے مہربانی دیواریں نہ بنائیں ۔
Mazeed Kahaniyan Parhne Ke Liye Yahan Click Karein 
2 Bhaiyon Ki Larai
Sabaq Amoz Kahani Urdu Mein
Emotional Story Urdu Mein

Wo Dono Bhai 40 Saal Sy Apas Main Ittefaq Sy Reh Rahy Thy. Aik Bohat Bara Zarai Form Tha. Jis Main Sath Sath Ghar Thy. Dono Khandan Aik Dosry Ka Khiyal Rakhty, Olaado Main B Bohat Pyar Aur Mohabbat Thi.
Aik Din Dono Bhaiyon Main Kisi Baat Par Ikhtilaf Ho Gya Aur Aisa Bhara k Nobat Gaali Galoch Tak Ja Pohnchi. Choty Bhai Ny Ghussy Main Dono Gharon k Darmiyan Aik Gehri aur Lambi Khai Khudwa Kar Us Main Qareebi Nehar Ka Pani Chor Dia Ta k Aik Dosry Ki Taraf Aany Jany Ka Rasta He Na Rahy.

Agly Roz Bary Bhai Ny Aik Tarkhan Ko Apny Ghar Bulaya aur Kaha k Wo Samny Wala Farm House Mery Bhai Ka Hai Jis Sy Ajkal Mera Jhagra Chal Raha Hai. Us Ny Mery Aur Apny Ghar K Darmiyan Jany Waly Rasty Par Aik Gehri Khai Bana Kar Us Main Pani Chor Dia Hai. Main Chahta Hun k Mery Aur Us K Farm House k Darmiyan Tum 8 Foot Unchi Baarh Laga Do Ta k Na Main Us ki Shakal Dekhun Aur Na He Us Ka Ghar Meri Nazro K Samny Aye. Aur Ye Kaam Jald Az Jald Mukammal Kar k Do Jis Ki Main Tumhain Mu Maangi Ujrat Dun Ga.

Tarkhan Ny Sar Hilaty Huwy Kaha k Mujy Pehly Aap Wo Jagah Dikhayen Jahan Sy Main Ny Baarh Ko Shru Karna Hai Ta k Hum Paimaish K Mutabiq Sath Waly Qasby Sy Zarorat K Mutabiq Matlooba Samaan La Sakain.
Moqa Dekhny k Baad Tarkhan Bhary Bhai ko Sath Ly Kar Qareebi Qasby Main Gya aur 4 5 Kaarigaron k Elawa Aik Bari Pick Up Par Zarorat Ka Tamam Saman Lay Kar Agya.
Tarkhan Ny Usy Kaha k Ab Aap Aaram Karain Aur Ye Kaam Hum Par Chor Dain. Tarkhan Apny Mazdooron Karigaron Samait Sara Din Aur Sari Raat Kaam Karta Raha.

Subah Jab Bary Bhai ki Aankh Khuli To Ye Dekh Kar Us Ka Mu Latak Gya k Wahan 8 Foot To Kya Aik Inch Unchi Baarh Naam ki B Koi Cheez Nahi Thi. Ghor Karny Par Maloom Huwa k Wahan To Aik Behtreen Pul Bana Huwa Tha.
Tarkhan Ki Is Harkat Par Heran Hota Huwa Wo JunHi Is Pull K Qareeb Pohncha To Dekha k Pul Ki Dosri Taraf Khara Huwa Us Ka Chota Bhai Uski Taraf Dekh Raha Tha. Chand Lamhy Wo Khamoshi Sy Khary Kabi Khai Aur Kabi Is Par Bany Pull Ko Dekhty Rahy. Choty Bhai Ki Ankhon Main Ansoo Agaye k Main Ny Baap Jaisy Bary Bhai Ka Dil Dukhaya Magar Us k Bawajood Wo Mujh Sy Taluq Nahi Torna Chahta.

Bary Bhai Ny Jab Apny Choty Bhai ki Ankhon Main Ansoo Dekhy To Us Ka B Dil Bhar Aya Aur Sochny Laga k Ghalti Jis Ki B Thi Mujy Yun Jazbati Ho Kar Muamla Bigarna Nahi Chahye Tha.
Dono Apny Apny Dil Main Sharminda, Ankhon Main Ansoo Liye Aik Dosry Sy Baghal Geer Ho Gaye. In Ki Dekha Dekhi Dono Bhaiyon k Bv Bachy B Apny Gharon Sy Nikal Kar Baghty Aur Shor Machaty Huwy Pul Par Akathy Ho Gaye.

Bary Bhai Ny Tarkhan Ko Dhondny k Lye Idhar Udhar Nazar Dorai To Dekha k Wo Apny Ozaar Pakry Jany Ki Tayyari Kar Raha Tha. Bara Bhai Jaldi Sy Us K Paas Pohncha Aur Kaha k Apni Ujrat Lety Jao. Tarkhan Ny Kaha: Is Pull Ko Banany Ki Ujrat Aap Sy Nahi Loon Ga Balky Us Sy Loon Ga Jis Ka Wada Hai. “ Jo Shakhs Allh Ki Raza Hasil Karny k Liye Logo Main Sulah Karwaye Ga, Allah Jald He Usy Ajar E Azeem Sy Nawazy Ga.”
Ye Keh Kar Tarkhan Ny Allah Hafiz Kaha aur Chal Dia.

Is Post ko Parhne Waly Tamam Dosto Sy Guzarish Hai k Koshish Krain k Is Tarkhan Ki Tarah Logo K Darmiyan Pull Banayen Na K Logo Ko Aik Dosry Sy Juda Karny Ka Sabab Banain.